ایمرجنسی ریسکیو 15 نے جدید ٹیکنالوجی کے ساتھ کام شروع کر دیا

 

ضلع رحیم یار خان میں فیڈ بیک سسٹم کے ساتھ پولیس ایمرجنسی ریسکیو 15 نے جدید ٹیکنالوجی کے ساتھ کام شروع کر دیا ۔ایک وقت میں چار افراد اپنی شکایات نوٹ کروا سکتے ہیں ۔ اضافی عملہ موبائل گاڑی ، کمپیوٹر اور گوگل میپس کی سہولت بھی فراہم ۔ڈی پی او ذیشان اصغر روزانہ عوام کو دئیے جانے والے رسپانس کو چیک کر رہے ہیں موقع پر نہ پہچنے والے اہلکاروں کی روزانہ جواب طلبی بھی جاری ۔تفصیل کے مطابق کچھ عرصہ قبل ڈی پی او ذیشان اصغر نے عوام کو کسی بھی ناگہانی اور ایمرجنسی کی صورت حال میں مدد فراہم کرنے کے لئے پولیس ایمرجنسی ریسکیو 15 کو جدید سہولیات سے آراستہ کر کے اس کی کارکردگی کو بڑھانے کے لئے ایس پی انوسٹی گیشن شاہ نواز اور اے ایس پی عبدالطیف مہر کو ٹاسک دیا تھا جن کی معاونت آئی ٹی انچارج شفقت وقاص کر رہے تھے ہر دو افسران نے ریسکیو 15 کے لئے پلان ترتیب دیا اور پھر اس پر عمل درآمد کے لئے چار جدید کمپیوٹرز ، آٹو کال ریسیور ، ضلع رحیم یار خان ، سرکلز اور تھانہ جات کے گوگل میپس تیار کروائے اور پھر ایک عمارت کا انتخاب کیا گیا جس میں یہ تمام سسٹم جس میں وائرلیس سسٹم بھی شامل ہے نصب کر کے پہلے ساتھ کی نفری کی بجائے اضافی نفری میں چوبیس گھنٹے کی دو شفٹیں ترتیب دیں عمارت میں اہلکاروں کو مکمل جدید سہولیات فراہم کر کے پولیس ایمرجنسی ریسکیو 15 کو فعال کر دیا گیا جہاں پر اہلکار چوبیس گھنٹے عوام کے لئے خدمات سر انجام دے رہے ہیں ۔ جدید ریسکیو 15 مکمل طور پر ڈیجیٹل ہے جس میں فیک کالرز کو بلاک کرنے کی سہولت بھی دستیاب ہے جبکہ اس سلسلہ میں روزانہ کی کارکردگی رپورٹ مرتب ہو کر ہر روز ڈی پی او ذیشان اصغر کو پیش کی جاتی ہے اگر کسی کال پر متعلقہ پولیس یا ذمہ دار اہلکار رسپانڈ نہیں کرتا تو اس کی اسی روز جواب طلبی کی جاتی ہے اور اس کے خلاف ضروری کارروائی عمل میں لائی جاتی ہے جبکہ کال کرنے والے افراد کوائی ٹی برانچ ڈی پی او آفس سے کال کر کے ان کی کال کی بابت معلومات بھی حاصل کی جاتی ہیں کہ پولیس نے ان کی شکایت پر کیا کارروائی کی

۔

Friday, July 21, 2017